جوہری معاہدے میں شامل رہیں گے: تین یورپی ممالک کا اتفاق

لندن، 9 مئی، ارنا - ایران کے جوہری معاہدے پر دستخط کرنے والے تین یورپی طاقتور یورپی ملک فرانس، برطانیہ اور جرمنی نے ایک مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ وہ اس معاہدے میں شامل رہیں گے.

تین ممالک نے اس بیان میں کہا کہ جوہری معاہدہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی 2231 قرارداد کے مطابق منظور کیا گیا ہے لہذا اس معاہدہ سیکورٹی لحاظ سے ہمارے لئے بہت ہی اہم ہے.

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرارداد کے مطابق عالمی جوہری معاہدہ ایران کے جوہری منصوبے کے مسائل کے لئے قانونی حل ہے اسی لئی ہم تمام رکن فریقین سے اس پر قائم رہنے اور مکمل عملدرآمد کرنے کے مطالبہ کر رہے ہیں.

اس بیان میں آیا ہے کہ عالمی ایٹمی توانائی ادارے کی رپورٹ کے مطابق ایران اپنے تمام وعدوں اور این پی ٹی معاہدے پر قائم ہے جس کی وجہ سے دنیا ایک پرامن جگہ بدل کیا گیا اور ہم اس معاہدے پر شامل رہیں گے.

انہوں نے کہا کہ ہماری حکومتیں جوہری معاہدے میں اپنے وعدوں پر قائم ہیں اور کوئی شک نہیں ہے کہ اس معاہدے کے تحت دوسرے فریقین کے درمیان باہمی تعاون کے ساتھ ایرانی قوم کی معیشت کی صورتحال میں مزید بہتری آئے گی.

تین ممالک نے کہا کہ ہم امریکہ سے جوہری معاہدے کی خلاف ورزی اور دوسرے فریقین کے وعدوں کے خلاف کوئی کاروائی کو روکنے کا مطالبہ کر رہے ہیں.

انہوں نے بتایا کہ امریکہ گزشتہ مہینوں کے دوران مذاکرات کے بعد جوہری ہتھیاروں کی پیداواری کی روک تھام کی کامیابیوں کو تحفظ کرے.

انہوں نے کہا کہ ہم اسلامی جمہوریہ ایران سے امریکہ کے موقف کے سامنے صبر کا مطالبہ کرتے ہیں اور ایران کو عالمی ایٹمی توانائی ادارے کے ساتھ باہمی تعاون کو جاری اور اپنے وعدوں پر قائم ہونا چاہیئے.

اس بیان کے مطابق، عالمی ایٹمی توانائی ادارے کو کوئی حد کے بغیر اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرنا چاہیئے جب تک ایران اپنے وعدوں پر قائم ہے ان کے خلاف پابندیوں کا خاتمہ ناگزیر ہے.

انہوں نے کہا کہ ہم یقین رکھتے ہیں کہ ایران کے جوہری منصوبہ غیرفوجی اور پرامن ہے اور ہمیں بیلسٹکسٹ میزائل کی سرگرمیاں، مشرق وسطی سمیت شام، یمن اور عراق میں بدامنی سرگرمیوں پر مشترکہ تشویشوں کے سامنے جواب دہ ہونا چاہیئے.

انہوں نے کہا کہ ہم اور اپنے وزرائے خارجہ ایران جوہری معاہدے میں شامل رہنے کو جاری رہیں گے.

تفصیلات کے مطابق، امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے منگل کی رات ایک بار پھر ایران اور جوہری معاہدے کے خلاف پرانے الزامات کو دہرا کر اس معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کا اعلان کردیا.

9393٭274٭٭

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@