صہیونی حکمران دوسروں کو دھمکانے میں اپنی سلامتی دیکھتے ہیں: ایران

تہران، 1 مئی، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے خفیہ جوہری سرگرمیوں سے متعلق صہیونی وزیراعظم کے الزامات کو سختی سے مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ صہیونی حکمران اپنی بقا اور سالمیت کو دوسروں کو دھمکانے میں محسوس کرتے ہیں.

ترجمان دفتر خارجہ 'بہرام قاسمی' نے صہیونی وزیراعظم کی جانب سے ایک پریس کانفرنس کے دوران ایران پر خفیہ جوہری سرگرمیوں کو فروغ دینے کو من گھڑت اور بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا کہ اسرائیل ایک جعلی اور جھوٹی ریاست ہے جس کے حکمران ہر وقت ایران کے خلاف مضحکہ خیز ڈرامے کرتے رہتے ہیں.

انہوں نے مزید کا کہ ناجائز صہیونی ریاست کے بدمعاش حکمران ایسے بے بنیاد دعوے اور جھوٹی کہانیاں بنانے میں شاطر ہیں جن کا مقصد ہی دوسروں کو دھمکا کر اپنی سلامتی کو یقینی بنانا ہے.

بہرام قاسمی نے کہا کہ نیتن یاہو نے ایران کے خلاف الزامات عائد کرنے کی ایک اور کوشش کی جسے ماضی کی طرح شرمناک ناکامی کا سامنا کرنا پڑا ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ نیتن یاہو جس کے ہاتھ مظلوم فلسطینی عوام بالخصوص معصوم بچوں کے خون سے آلودہ ہیں، کو اس بات کا اچھی طرح علم ہے کہ عالمی رائے عامہ اور عوام اب ایسی جھوٹی کہانیوں سے گمراہ نہیں ہونے والے.

یاد رہے کہ صہیونی وزیراعظم نے نام نہاد 'خفیہ ایٹمی فائلیں' افشا کی ہیں جس میں دعوی کیا گیا ہے کہ ایران نے خفیہ طور پر ایٹمی ہتھیار بنانے کی کوشش کی تھی.

نیتن یاہو نے یہ دعویٰ کیا کہ اسرائیل نے ہزاروں ایسی دستاویزات حاصل کی ہیں جن سے ظاہر ہوتا ہے کہ ایران نے دنیا کو یہ کہہ کر دھوکہ دیا کہ اس نے کبھی بھی ایٹمی ہتھیار بنانے کی کوشش نہیں کی.

نیتن یاہو کے من گھڑت دعوے ایسے وقت سامنے آرہے ہیں جبکہ قائد اسلامی انقلاب حضرت آیت اللہ 'سید علی خامنہ ای' جو اسلامی جمہوریہ ایران کے سب سے اعلی رہنما ہیں نے ایک تاریخی فتوے کے تحت جوہری ھتھیاروں کے استعمال کو حرام قرار دیا ہے.

اسلامی جمہوریہ ایران کے پُرامن جوہری پروگرام بالکل شفاف اور مختلف بین الاقوامی اداروں کی رپورٹس بالخصوص عالمی جوہری توانائی ادارے (IAEA) نے بھی بارہا ایران کے پُرامن کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا ہے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@