ایرانی سیکورٹی فورسز اور شرپسندوں کے درمیان جھڑپ، ایک اہلکار کی شہادت

زاہدان، 25 دسمبر، ارنا - ایران کے جنوب مشرقی علاقے 'سراوان' میں بارڈر سیکورٹی فورسز اور اسمگلروں کے درمیان جھڑپ کے نتیجے میں ایک اہلکار شہید اور دو شرپسند ہلاک ہوگئے.

تفصیلات کے مطابق، سیکورٹی فورسز نے اس دوران اسمگلروں سے 2 ٹن مختلف منشیات بھی برآمد کیں.

صوبہ سیستان و بلوچستان کے سرحدی علاقے سراوان کے گورنر 'درویش نارویی' نے ارنا نیوز ایجنسی کو بتایا کہ پیر کی الاصبح کو سرحدی پوانٹ مک میں سیکورٹی فورسز اور اسمگلروں کے درمیان جھڑپ ہوئی جس کے نتیجے میں رنجرز کے اہلکار 'رسول طالبی' نے جام شہادت نوش کیا جبکہ دو شرپسندوں کو بھی جہنم واصل کردیا گیا.

شہید طالبی ایران کے شہر شیراز سے تعلق کھتے تھے اور ان کی ایک بیٹی بھی ہے.

یہ بات قابل ذکر ہے کہ سراوان ایران کے جنوب مشرقی صوبے سیستان سے 347 کلومیٹر کی دوری پر واقع ہے جس کی سرحدین پاکستانی سرزمین سے ملتی ہیں.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@