القدس پر ٹرمپ کی غلطی پالیسی سے مسلم امہ مزید متحد ہوگئی: ایرانی صدر

تہران، 20 دسمبر، ارنا - ایران کے صدر مملکت نے صہیونیوں کے خلاف فلسطینی قوم کی نئی انتفاضہ کے آغاز کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیت المقدس پر امریکی صدر کی غلط پالیسی سے عالم اسلام آپس میں مزید متحد ہوگیا ہے.

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر 'حسن روحانی' نے تہران میں ثقافتی انقلاب کی اعلی کونسل کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کہی.

اس موقع میں انہوں نے ترکی کے شہر استنبول میں منعقدہ اسلامی تعاون تنظیم کے غیر معمولی اجلاس کے حوالے سے ایک رپورٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس سربراہی اجلاس میں شرکت کرنے والے ممالک کے حکام نے بیت المقدس اور فلسطین کے خلاف امریکہ اور صہیونی ریاست کی حالیہ سازشوں کی شدید مذمت کی.

روحانی نے کہا کہ امریکی سفارت خانہ تل ابیب سے بیت المقدس منتقل کرنے کے ٹرمپ کے بیوقوفانہ فیصلہ نے اس حوالے سے مسلمانوں کو مزید متحد ہو کر امت مسلمہ کی توجہ کو فلسطینی مسئلے پر متوجہ کیا ہے.

انہوں نے کہا کہ امت مسلمہ اور فلسطین کے خلاف امریکی اور صہیوںی عزائم اب تک ناکام ہوگئے ہیں اور فلسطینی عوام کی مزاحمت اور نئی انتفاضہ کے آغاز کے ساتھ جابر صہیوںی ریاست کی دوسری شیطانی سازشیں بھی ناکام ہوجائیں گی.

9410*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@