انسانی حقوق پر ایران کی توجہ اصولی اور آئینی ہے: ایڈمیرل شمخانی

تہران، 16 دسمبر، ارنا - اعلی ایرانی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ ہم آئین اور قانون کے تحت انسانی حقوق کی تعمیل کرتے ہیں تاہم سامراجی قوتیں اس حوالے سے اپنے سیاسی مقاصد حاصل کرنے کے لئے ایران کے لئے مشکلات پیدا کرنا چاہتی ہیں.

یہ بات ایڈمیرل 'علی شمخانی' نے ہفتہ کے روز ایران میں انسانی حقوق کے عنوان سے منعقد ہونے والی سمینار میں خطاب کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ سامراجی عناصر انسانی حقوق کا بہانہ بناکر ایران کے خلاف مسائل پیدا کرنا چاہتے ہیں مگر ہمیں خیال رکھنا ہوگا کہ ایسی منصوبہ بندیوں سے ہم انسانی حقوق کے حوالے سے اپنا کرداد ادا کرنے سے غافل نہ ہوں.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ دین اسلام کے تعلیمات کے مطابق، استحکام اور معصومیت ایرانی عدالتی نظام کی بنیاد ہیں.

ایڈمیرل شمخانی نے کہا کہ سامراجی طاقت انسانی حقوق کے بہانے سے اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف سیاسی چیلنچ پیدا کرنا چاہتی ہے اسی لئے ہمیں بہت ہی ہوشیار رہنا چاہیئے.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ اعلی ایرانی حکام کے ایماندار بیانات اور سلوک ایرانی نظام کے استحکام کی اصلی وجہ ہیں.

اعلی ایرانی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے ایران میں انسانی حقوق کی وضاحت اور وسیع قانونی صلاحیت کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ہمیں اپنے عدلیے کے مسائل کو قومی سلامتی کے مسئلہ بننے کی اجازت نہیں اور اسلامی دنیا میں انسانی حقوق کے حوالے سے پہلی پوزیشن حاصل کرنے کے لئے کوشش کرنا چاہئے.

تفصیلات کے مطابق، ایران کے انسانی حقوق کے معیار کی عکاسی کے عنوان سے منعقدہ خصوصی اجلاس کا آج بروز ہفتہ ایرانی دارالحکومت تہران میں انعقاد کیا گیا جس میں ایڈمیرل علی شمخانی اور دوسرے اعلی ایرانی حکام نے شرکت کی.

9393*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@