ایران کے اندرونی معاملات پر بیان دینے کے حوالے سے خاتون یورپی رہنما کی تردید

ویانا، 16 دسمبر، ارنا - یورپی یونین کی چیف خارجہ پالیسی کی ترجمان نے کہا ہے کہ 'فیڈریکا مغرینی' نے یورپی پارلیمنٹ میں اپنی حالیہ تقریر میں ایران کی اندرونی پالیسی پر بات نہیں کی اور اس حوالے سے کوئی بیان بھی ان سے منسوب کرنا غلط ہے.

یہ بات خاتون یورپی رہنما کی ترجمان نے ارنا کے نمائندے کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی.

ترجما نے مزید بتایا کہ کہا کہ مغرینی نے یورپی یونین کی پارلیمنٹ کے اجلاس میں جوہری معاہدہ اور پابندیوں کے خاتمے کے علاوہ اسلامی جمہوریہ ایران اور یورپی یونین کے درمیان کثیرالجہتی تعلقات کو فروغ دینے پر بات کی.

انہوں نے کہا کہ ابھی صورتحال میں مختلف طریقوں سے ایسے دوطرفہ تعلقات کو معمول بن رہے ہیں جیسے 2016 کے 14 اپریل کو ایرانی وزیر خارجہ 'محمد جواد ظریف' اور مغرینی کے درمیان جامع بیان اور 2017 کے 20 نومبر کو ایران اور یورپی یونین کے اعلی حکام کے درمیان تیسرے مذاکرات اس کی علامت ہیں.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ جوہری معاہدہ صرف ایران کے پرامن ایٹمی پروگرام کا جائزہ لیتا ہے اور یہ ہرگز علاقائی مسائل سے متعلق نہیں ہے اور کسی بھی رکن ممالک اس کی تبدیلی کا نہیں چاہتے تھے.

تفصیلات کے مطابق، یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کی سربراہ نے مںگل کے روز جوہری معاہدے کے ڈرافٹ کے ایک فقرے کا حوالہ دیتے ہوئے دعوی کیا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی درخواست کی بنا پر یہ فقرہ خطے میں نئے تعلقات کی بنیاد ہوسکتی ہے.

9393*274**

ہميں اس ٹوئٹر لينک پر فالو کيجئے. IrnaUrdu@