امریکہ جھوٹے الزامات دہرا کر اپنی غلطیوں کا ازالہ نہیں کرسکتا: ایران

تہران، 6 دسمبر، ارنا - ایران کے ترجمان دفترخارجہ نے امریکی وزیر خارجہ کے حالیہ منفی بیانات کے جواب میں کہا ہے کہ من گھڑت اور جھوٹے الزامات دہرانے سے امریکہ کبھی بھی اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف کی جانے والی غلطیوں اور خطے میں اپنی شکست کا ازالہ نہیں کرسکتا.

'بہرام قاسمی' نے بدھ کے روز اپنے ایک بیان میں مزید کہا کہ امریکی وزیر خارجہ 'ریکس ٹلرسن' نے یورپی یونین کی نمائندے کے ساتھ اپنی حالیہ ملاقات میں ایک بار پھر ایران کے خلاف بے بنیاد الزامات کو دہرائے جو صرف ایران کے خلاف ایک غیرموثر اور بیہودہ ضدبازی ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ امریکی رہنما ایران کے خلاف ایست الزامات اور جھوٹے بیانات کو دہرانے سے خطے میں اپنی غلطیوں کو نہیں چھپا سکتے اور نہ ہی وہ ایران کے سامنے اپنی منفی حکمت عملی کا ازالہ کرسکتے.

قاسمی نے کہا کہ دوسرے ممالک کو ملزم ٹھرا کر کسی درد کا علاج نہیں کیا جاسکتا لہذا ریکس ٹلرسن کو چاہئے جب تک وقت ہے زمینی حقائق کو جان لیں بالخصوص خطے میں ہزاروں نہتے عوام، عورتوں اور بچوں کے قتل عام پر غور کریں.

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران دہشتگردی، جارحیت اور فوجی بغاوت جیسی سازشوں کا شکار رہا ہے مگر اس کے باوجود ہم آج دہشتگردی کے خلاف جنگ کی فرنٹ لائن پر ہیں.

بہرام قاسمی نے مزید کہا کہ ایران کے خلاف بے بنیاد الزامات کا سلسلہ جاری رہنے کی یہی علامت ہے کہ امریکہ خطے میں دہشتگردی کی حمایت کرتا ہے.

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران عالمی قوانین کے تحت عالمی اور علاقائی امن و سلامتی کے لئے اپنے تعمیری کردار کو جاری رکھے گا اور اس حوالے سے کسی بھی قسم سے الزامات اور دھمکیوں کی پرواہ نہیں کرتا.

274**

ہميں اس ٹوئٹر لينک پر فالو کيجئے. IrnaUrdu@