ایران نے امریکی پابندیوں کی خاطر اپنے شہریوں کے بینک اکاونٹس منجمد ہونے کی تردید کردی

تہران، 4 دسمبر، ارنا - ایران کے مرکزی بینک کے سربراہ نے حالیہ امریکی پابندی جسے CAATSA کہا جاتا ہے، کی وجہ سے بعض ممالک میں موجود ایرانی شہریوں کے بینک اکاؤنٹس منجمد ہونے کی خبروں کی تردید کردی.

یہ بات 'ولی اللہ سیف' نے گزشتہ روز چینی پارلیمنٹ کے نائب صدر کے ساتھ ایک ملاقات کے بعد صحافیوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ وہ امریکی کاتسا نامی پابندیوں کی وجہ سے بعض ایرانی شہریوں کے بینک اکاؤنٹس منجمد ہونے کی خبروں کی تصدیق نہیں کرسکتے اور نہ ہی اس پر قبل از وقت تبصرہ کریں گے.

انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی شہریوں کے بینک اکاؤنٹس منجمد ہونے کی غیرمصدقہ خبروں کی تصدیق نہیں کرسکتے تاہم امریکی اقدامات کا مقابلہ کرنے کے لئے ایران ہر وقت تیار ہے اور مناسب وقت پر ہم اپنے پاس موجود آپشنز کا استفادہ کریں گے.

ایرانی مرکزی بینک کے صدر نے کہا کہ چین کے ساتھ بینکاری شعبے میں سہولیت کاری کے سلسلے کو بڑھانے کے لئے آمادہ ہیں.

ایران اور چین کے درمیان موجودہ اقتصادی تبادلوں پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ولی اللہ سیف نے مزید کہا کہ بینکاری تعاون کے فروغ سے دوطرفہ تعلقات کو بڑھانے کے لئے مدد ملے گی.

274**

ہميں اس ٹوئٹر لينک پر فالو کيجئے. IrnaUrdu@