انسانی حقوق میں ثقافتی تنوع کا شامل ہونا ضروری ہے: خاتون ایرانی نائب صدر

نیویارک، 2 دسمبر، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران کی نائب صدر برائے قانونی امور نے اس بات پر زور دیا ہے کہ ثقافتی تنوع انسانیت کی اعلی اقدار ہے جو انسانی حقوق میں اس پر خاص اہمیت دینا ضروری ہے.

یہ بات 'لعیا جنیدی' نے ہفتہ کے روز نیویارک میں 'غیر وابستہ تحریک (NAM) کی انسانی حقوق اور ثقافتی تنوع' کے عنوان سے منعقدہ نشست کے موقع پر ارنا کے نمائندے کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ یہ نشست اسلامی جمہوریہ ایران کی درخواست کی بنا پر اقوام متحدہ میں منعقد ہو رہی ہے جو وینزویلا اس کی قیادت کر رہی ہے.

جنیدی نے انسانی حقوق اور ثقافتی تنوع کے حوالے سے 'تہران کے اعلامیہ اور ایکشن پلان' کی دسویں سالگرہ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ منعقدہ نشست میں بعض حصہ لینے والوں نے اس بیان کے مطابق عمل کرنے پر اتفاق کیا.

انہوں نے مزید کہا کہ اس نشست میں شرکت کرنے کا ہمارا مقصد قانونی نظام میں انسانی حقوق کے تصورات، ایرانی آئین کے مطابق انسانی حقوق اور ثقافتی تنوع کے درمیان توازن کا متعارف کروانا ہے.

انہوں نے کہا کہ ایرانی حکومت اور مسلم قوم انصاف، اسلامی عدالت اور انسانی حقوق کے مطابق غیرمسلم قوم کے ساتھ سلوک کرتی ہیں جو یہ ہمارے ملک میں ثقافتی تنوع کی منظوری کی علامت ہے.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ منعقدہ نشست میں شرکت کرنے والے ممالک انسانی حقوق اور ثقافتی تنوع کے درمیان توازن کا جائزہ لے رہے ہیں کیونکہ ثقافتی تنوع انسانی اقدار کی ترقی کا باعث بن سکتا ہے.

خاتون ایرانی نائب صدر نے کہا کہ اس نشست کے موقع پر ہم نے اقوام متحدہ کے سیکیرٹری جنرل کے ڈپٹی برائے انسانی حقوق کے امور 'لوکاک' کے ساتھ ملاقات کی اور انہوں نے ایرانی علاقوں میں زلزلے سے متاثرہ عوام کی امداد کے لئے اپنی تیاری کا اعلان کیا.

انہوں نے بتایا کہ لوکاک نے اس حوالے سے ایرانی حکومت اور قوم کی بروقت امداد کی تعریف کی.

انہوں نے میانمار میں روہنگیائی مسلمانوں کی صورتحال کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہم اس ملاقات کے دوران بنگلہ دیش سے مظلوم روہنگیائی مسلمانوں کی واپسی اور ان کی سہولیات فراہم کرنے پر تبادلہ خیال کیا.

خاتون ایرانی عہدیدار نے کہا کہ ہم لوکاک کے ساتھ یمن اور شام میں انسانی حقوق پر بات چیت کرتے ہوئے اس حوالے سے اقوام متحدہ کے سنجیدہ اقدامات کا جائزہ لیا.

جنیدی نے گزشتہ بدھ کے روز فلسطینی عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کے عالمی دن کی مناسبت سے منعقدہ نشست کو اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ جنرل اسمبلی کے سربراہ اور سیکورٹی کونسل کے چیئرمین نے مظلوم فلسطینی عوام کی حمایت کی نشاندہی کے لئے اس نشست میں شرکت کی.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ مسئلہ فلسطین تمام اسلامی دنیا کے لئے بہت اہم ہے اور اسلامی جمہوریہ ایران تمام سخت لمحوں میں اس ملک کے مظلوم اور نہتے عوام کے ساتھ کھڑا رہا ہے.

خاتون ایرانی نائب صدر برائے قانونی امور نے وینزویلا کے وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انہوں نے غیروابستہ ممالک کی انسانی حقوق اور ثقافتی تنوع کی نشست کے انعقاد کا شکریہ ادا کرتے ہوئے خطے، وینزویلا اور لاطینی امریکہ میں موجودہ مسائل اور مشکلات کے حل پر زور دیا.

9393**

ہميں اس ٹوئٹر لينک پر فالو کيجئے. IrnaUrdu@