خلیج فارس میں امریکہ کی جانب سے ایک پھر اشتعال انگیزی

تہران - ارنا - سپاہ پاسداران اسلامی انقلاب (IRGC) نے کہا ہے کہ گزشتہ ایک ہفتے کے دوران امریکہ دوسری بار خلیج فارس میں اشتعال انگیزی اور غیرپیشہ وارانہ اقدام کرنے کا مرتکب ہوا ہے.

پاسداران انقلاب کی بحریہ 'ذوالفقار ریجیمیںٹ' نے ہفتہ کے روز ایک بیان میں کہا کہ امریکی سمندری جہاز نے گزشتہ دنوں بلا اشتعال ہوائی فائر کیا تھا اور انہوں نے اس دفعہ خلیج فارس کے درمیانی علاقے میں ایسا اقدام دوبارہ دہرایا.

اس بیان کے مطابق، امریکی بحری بیڑے، نمیٹز (USS Nimitz) اور اس کے ہمراہ ایک اور کشتی ایران کے سمندری تیل سٹیشن رسالت کے قریب آئے جن پر پاسداران انقلاب کے ذوالفقار ریجیمینٹ بہت قریب سے امریکی جہازوں پر نظر رکھتے ہوئے تھے.

امریکی سمندری جہاز نے اشتعال انگیزی اور غیر پیشہ وارانہ اقدام کے تحت ہوائی فائرنگ کی جبکہ سپاہ پاسداران کی کشتیوں نے امریکی جہاز کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے اپنا مشن جاری رکھا.

اس بیان میں مزید کہا گیا کہ پاسداران انقلاب نے امریکی اشتعال انگیزی کی پرواہ نہ کی جس کے بعد امریکہ کے بحری جہاز اس علاقے سے نکل گئے.

٢٧٤**