سائنسی میدان میں ترقی سے ایران کی عزت اور طاقت میں اضافہ ہوگا: صدر روحانی

تہران - ارنا - صدر اسلامی جمہوریہ ایران ڈاکٹر 'حسن روحانی' نے کہا ہے کہ مختلف سائنسی شعبوں میں صلاحیت میں اضافہ ہونے سے وطن عزیز اسلامی ایران کی عزت اور طاقت کی پوزیشن مزید مستحکم ہوگی.

یہ بات صدر روحانی نے امام خمینی (رح) سے منسوب نئے قومی خلائی مرکز کے افتتاح اور سیارہ خلاء میں لے جانے والی سیمرغ نامی شٹل کے کامیاب تجربے کے موقع پر اپنے انسٹاگرام پیج پر ایک پیغام میں کہی.

انہوں نے اس موقع پر کہا کہ آج سائنس اور خلائی ٹیکنالوجی ہمارے لئے بہت اہمیت رکھتی ہیں اور مختلف سائنسی لحاظ سے جتنا ہماری طاقت اور قابلیت میں اضافہ ہوں اتنی ہی وطن کی عزت اور طاقت مستحکم ہوگی.

صدر روحانی نے مزید کہا کہ ایران میں جوہری معاہدے سے دوسروں کے تجربات کا تعمیری انداز سے استفادہ کرنے کی فضا قائم ہوگئی ہے لہذا ہم اپنے ملکی ماہرین اور سائنسدانوں کی صلاحیت کے بدولت قومی ترقی کے عمل کو آگے بڑھاسکتے ہیں.



تفصیلات کے مطابق، امام خمینی (رح) خلائی سٹیشن کا گزشتہ روز باقاعدہ افتتاح کردیا گیا اور یہ ایران کا پہلا خلائی مرکز ہے جہاں سے سیاروں کے خلاء میں بھیجنے اور انھیں کنٹرول کیا جاتا ہے.

اس مرکز کی تعمیر کے لئے دنیا کی جدیدترین ٹیکنالوجی کا استعمال کیا گیا ہے اور سیٹلائٹ نیویگیشن نظام بالخصوص ایل ای او مدار کے حوالے سے تمام ضروریات ملکی وسائل سے تیار کی گئیں ہیں.

سیمرغ شٹل 250 کلوگرام وزنی سیارے کو خلاء میں لے جانے کی صلاحیت رکھتی ہے اور وہ سیارہ زمین سے پانچ سو کلومیٹر دوری کے فاصلے پر رہ سکتا ہے.

274**