ناجائز صہیونی ریاست، ریاستی دہشتگردی اور خوف پھیلنے کی جڑ ہے: ایران

تہران - ارنا - ایرانی دفتر خارجہ کے ترجمان نے مظلوم فلسطینی عوام کے خلاف ناجائز صہیونی ریاست کے وحشیانہ اقدامات کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی دنیا میں مسئلہ فلسطین بہت ہی اہم ہے اور ناجائز صہیونی ریاست ریاستی دہشتگردی اور خوف و ہراس پھیلنے کی جڑ ہے.

يہ بات 'بہرام قاسمي' نے اتوار كے روز صہيوني فورسز كي جانب سے فلسطيني نمازيوں كو مسجد الاقصي ميں داخلے سے روكنے كے وحشيانہ اقدامات كي شديد الفاظ ميں مذمت كرتے ہوئے كہي.

اس موقع پر انہوں نے كہا كہ تمام ميڈيا اور اقوام، خودمختار اور عالمي حكومتوں كو مظلوم فلسطيني قوم كي حمايت اور ناجائز صہيوني رياست كے وحشيانہ اقدامات سے مقابلہ كرنا چاہيئے.

بہرام قاسمي نے اس بات پر زور ديا كہ مسجد الاقصي مسلمانوں كا قبلہ اول ہے اور ناجائز صہيوني رياست كي جانب سے مظلوم فلسطيني عوام كے خلاف مسلسل سازشيں ان كے حق كي خلاف ورزي كي علامت ہے اور اسلامي دنيا كا اہم مسئلہ؛ مسئلہ فلسطين ہے اورناجائز صہيوني رياست، رياستي دہشتگردي اور خوف و ہراس پھيلنے كي جڑ ہے.

انہوں نے بعض علاقائي ممالك كي خاموشي پر اپنے ردعمل كا اظہار كرتے ہوئے اور عالمي برادري بالخصوص اقوام متحدہ سے مقبوضہ فلسطين كي مظلوم قوم كي حمايت اور ناجائز صہيوني رياست كے نسلي امتياز اور مذہبي امتيازي سلوك كي پاليسيوں سے مقابلہ كرنے كا مطالبہ كيا.

ايراني ترجمان خارجہ نے كہا كہ عالمي برادري اور انساني حقوق كي تنظيموں سميت اقوام متحدہ كي انساني حقوق كونسل اور اقوام متحدہ كي تعليمي، سائنسي اور ثقافتي تنظيم (يونيسكو) كو اسرائيليوں كي غير انساني اور غيرثقافتي پاليسيوں اور مخالف انساني حقوق كے قوانين سے نمٹنا چاہيئے.

تفصيلات كے مطابق ناجائز صہيوني فورسز نے گزشتہ جمعہ كي طرح اس جمعہ كے روز نمازيوں كو مسجدالقصي كے اندر جانے كو روك ديتے ہوئے اور تين مظلوم فلسطيني افراد شہيد ہوگئے.

9393*271**