ایران نے صیاد-3 طیارہ شکن میزائل کی پروڈکشن لائن کا افتتاح کر دیا

تہران - ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے ہفتہ کے روز جدید طیارہ شکن میزائل 'صیاد-3' کی پروڈکشن لائن کا افتتاح کردیا گیا.

تفصیلات کے مطابق۔ ایرانی وزیر دفاع بریگیڈیئر جنرل 'حسین دہقان' کی موجودگی میں دنیا کی انتہائی جدید جنگی ٹیکنالوجی سے بنائے گئے صیاد-3 کی پیداوار کے عمل کا باضابطہ آغاز کردیا گیا ہے.

اس تقریب کے موقع پر وزیر دفاع کے علاوہ اعلی ایرانی عسکری حکام اور دفاعی سائنسدان موجود تهے.

انہوں نے مزید کہا کہ صیاد-3 میزائل 120 کلومیٹر کی رفتار میں مار کرنے کی قابلیت اور زمین سے 27 کلومیٹر کے فاصلے پر پرواز کرسکتا ہے.

ایرانی وزیر دفاع نے کہا کہ صیاد-3 میزائل اینٹی ریڈار جنگی طیارے، ڈرون، کروز میزائل، ہیلی کاپٹر اور دیگر پرواز کرنے والے اشیا کو نہایت تیز رفتاری سے اور بہ آسانی نشانہ بناسکتا ہے.

انہوں نے کہا کہ صیاد-3 انفراریڈ سسٹم سے لیس ہے اور الیکٹرانک جنگوں کا مقابلہ کرنے کی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے.

ایرانی وزیر دفاع نے اس موقع پر کہا کہ مسلح افواج کی جنگی ضروریات بالخصوص جدید ہتهیاروں کی ساز و سازمان کی فراہمی کے لئے ایک موثر حکمت عملی اپنائی ہوئی ہے.

ایرانی وزیر دفاع نے صیاد-3 میزائل کی باقاعدہ پروڈکشن لائن کے افتتاح پر سپریم لیڈر حضرت آیت اللہ خامنہ ای، ایرانی مسلح افواج اور دفاعی سائنسدانوں اور دفاعی شعبے سے منسلک اہلکاروں کو مبارکباد پیش کی.

٢٧٤**