ایران میں امدادی سرگرمیوں کے لئے موٹر بائیک ایمبولینسیں چلائی جائیں گی

تہران - ارنا - ایرانی دارالحکومت 'تہران' میں امدادی سرگرمیوں میں حصہ لینے کے لئے 200 موٹر بائیک ایمبولینس چلائی جائیں گی.

یہ بات ایران کے شعبہ ایمرجنسی کے سربراہ 'پیرحسین کولیوند' نے منگل کے روز ارنا کے نمائندے کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ تہران میں امدادی سرگرمیوں کے لئے بیرون ملک سے 200 موٹر بائیک ایمبولینس منگوائی گئیں تھیں مگر کچھ کسٹم مسائل کے باعث وہ تین ماہ سے کسٹم سے باہر نہیں آسکی مگر ان تمام مسائل کو ختم کرکے اب موٹر بائیک ایمبولینسیں ایران کی امدادی بیڑے میں شامل کردی گئیں ہیں.

انہوں نے کہا کہ آئندہ پیر کے روز سے یہ نئی ایمبولینسیں باضابطہ طور پر اپنے کام کا آغاز کریں گی اور یقینا جدید موٹر بائیک ایمبولینس کے آنے سے تہران میں امدادی سرگرمیوں میں مزید تیزی آئے گی.

ایرانی عہدیدار نے بتایا کہ موٹر بائیک ایمبولینس دنیا کی جدید ٹیکنالوجی سے لیس ہے اس میں ابتدائی طبی امداد کی اشیا رکھی گئیں ہیں اور جب تک ایمبولینس نہ پہنچے یہ موٹر بائیک ایمبولینس ضرورتمند افراد کی دیکھ بھال کے لئے سرگرم رہے گی.

انہوں نے کہا کہ عوام کو امدادی خدمات کے حصول کے لئے موٹر بائیک ایمبولینسوں کو تہران کے 200 علاقوں میں رکھا جائے گا اور ان کے آنے سے اب ٹریفک کا مسئلہ بھی امدادی خدمات میں رکاوٹ نہیں بن سکتا.

٢٧٤**