ایران میں بجلی کی پیداوار 7900 میگاواٹ تک پہنچ گئی

تہران - ارنا - صدر روحانی کی قیادت میں 11ویں ایرانی حکومت جس کی میعاد کچھ ہی دنوں بعد ختم ہونے والی ہے، کے دور میں گزشتہ سال کے آخر تک ملک میں بجلی کی پیداوار 7900 میگاواٹ تک پہنچ گئی.

تفصیلات کے مطابق ایرانی پاور پلانٹ مشرق وسطی میں پہلی پوزیشن، ایشیا میں تیسری پوزیشن اور دنیا بھر میں چودہویں پوزیشن پر آگیا اور عالمی استعمال میں ایران کی پوزیشن اٹھارہویں ہے.

ایرانی پاور پلانس 76647 میگا واٹ بجلی پیدا کررہی ہیں جس سے 35 پاورپلانٹ 36 فیصد تھرمل پاور پیدا کرتے ہیں.

ایران میں نئے تھرمل پاورپلانٹ کی تعمیر، مقامی ٹھیکیداروں کی صلاحیتوں سے استعمال، ملک میں ٹیکنالوجی کی منتقلی ایرانی گیارھویں حکومت کی کامیابیوں میں سے ایک ہے اور نجی اور سرکاری حصوں میں 10 ہزار میگا واٹ تھرمل پاورپلانٹ کی تعمیر کررہا ہے.

واضح رہے کہ ایرانی گیارھویں حکومت کے دوران مالی رکاوٹوں کے باوجود کمبائنڈ سائیکل پاور پلانٹ کی تکمیل، تھرمل پاور پلانٹس میں گیس کی کھپت کے حصے میں اضافے کے ساتھ پاورپلانٹس کی کارکردگی اور پیداور میں 38 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا ہے جو یہ سنجیدہ اقدام ماحولیات کی صورتحال کو بہتر بنانے کا باعث بن سکتا ہے.

ایرانی دسویں حکومت کے دوران نئی قابل تجدید بجلی پاورپلانٹ کی کارکردگی 165 میگا واٹ تھا جو گیارھویں حکومت کے سنجیدہ اقدامات کے ذریعہ یہ رقم 341 میگا واٹ تک اضافہ ہوگیا اور اسی دوران میں 350 نجی اور سرکاری کمپنیوں اس حوالے سے سرگرم عمل ہیں.

تفصیلات کے مطابق ایرانی گیارھویں حکومت کے ابتدا سے 2016 کے آخر تک ایرانی بجلی صارفین 50 لاکھ تک پہنچ گیا.

9393*274**