ایران اور ترکی باہمی تجارتی حجم کو 50 ارب ڈالر تک لے جانے کے لئے پُرعزم

تہران - ارنا - ترک وزیر اقتصادیات 'نیهات زیبک چی' جو ایک اعلی سطحی وفد کے ہمراہ ایران کے دورہ پر ہیں، نے کہا ہے کہ ایران اور ترکی باہمی تجارتی حجم کو 50 ارب ڈالر تک لے جانے کے لئے پُرعزم ہیں.

ترک وزیر اقتصادیات نے گزشتہ روز تہران میں ایرانی وزیر انفارمیشن اور ٹیکنالوجی محمود واعظی کے ساتھ ایک ملاقات کے دوران مزید کہا کہ ترکی، ایران کے ساتھ ٹرانسپورٹیشن اور کسٹم سمیت دیگر شعبوں میں باہمی تعاون کے فروغ کے لئے موجودی رکاوٹوں کا خاتمہ چاہتا اور اس مقصد کے لئے ہم دونوں ممالک کے درمیان آزادانہ تجارتی معاہدے کے خواہاں ہیں.

انہوں نے دونوں ملکوں کے نجی شعبوں کے درمیان تعلقات کی توسیع پر زور دیتے ہوئے مزید کہا کہ دونوں ممالک کے نجی شعبوں کا کردار بہت اہم ہے جس سے ایران اور ترکی اپنے اقتصادی اہداف کو پورا کرسکتے ہیں.

ایران ترکی مشترکہ اقتصادی کمیشن کے سربراہ نے دونوں ممالک کے درمیان سرمایہ کاری اور تجارتی روابط کے فروغ پر زور دیا.

انہوں نے ایران اور ترکی کے درمیان بینکنگ روابط کی بحالی پر اپنے اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے اس عمل کو باہمی روابط کے فروغ میں سنگ میل قرار دیا.

ایرانی وزیر مواصلات اور اطلاعات نے بھی کہا کہ دونوں ممالک نے آزاد تجارتی معاہدے کے نفاذ کے لئے مزید کوششیں تیز کرنے پر اتفاق کیا ہے.

١*٢٧٤**