جوہري معاہدے سے ايراني وقار اور سماجي ترقي ميں اضافہ ہوا: ايراني عہديدار

تہران – ارنا – ايراني دارالحكومت تہران ميں قائم يونيسكو كے اي لرننگ دفتر كے چيئرمين نے ايران جوہري معاہدے كو ايك قومي سرمايہ قرار ديتے ہوئے كہا ہے كہ جوہري معاہدے سے اسلامي جمہوريہ ايران كے وقار اور سماجي ترقي ميں اضافہ ہوا ہے.

يہ بات ايران كي 'علم اور صنعت' يونيورسٹي كے سربراہ 'علي اكبر جلالي' نے ہفتہ كے روز تہران ميں قومي يوم صنعت اور كان كني كے حوالے سے منعقدہ كانفرنس ميں خطاب كرتے ہوئے كہي.

اس موقع پر انہوں نے كہا كہ ايراني گيارھويں حكومت كا تسلسل ايك سنہري موقع ہے جو ہميں اسے صحيح استعمال كرنا چاہيئے.

جلالي نے كہا كہ مستقبل كے روزگاروں علم پر مبني ملازمتيں كے شامل ہيں اسي لئے ہمارے نقطہ نظر اور بصيرت كو تبديل كرنا ضروري ہے.

انہوں نے A380 طيارے كي درآمدات كا حوالہ ديتے ہوئے اس بات پر زور ديا كہ ہم دنيا بھر ميں زيادہ كاميابياں حاصل كرسكتے ہيں اور ميگاپروجيكٹس كے ذريعہ چھوٹي صنعتوں پيدا كريں گے.

9393*274**