عالمی کمپنیاں ایرانی منڈیوں تک رسائی کے لئے بے تاب ہیں: نائب ایرانی صدر

تہران - ارنا - سنئیر نائب ایرانی صدر نے عالمی برادری کے ساتھ تعلقات کے فروغ کے حوالے صدر روحانی کی نمایاں کارکردگی کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ آج وطن عزیز میں سرمایہ کاری کے بے انتہا مواقع کو دیکھتے ہوئے بین الاقوامی کمپنیاں ایرانی منڈیوں تک رسائی کے لئے بے تاب ہیں.

یہ بات 'اسحاق جہانگیری' نے ہفتہ کے روز تہران میں قومی یوم صنعت اور کان کنی کے حوالے سے منعدہ کانفرنس میں خطاب کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ہم نے جوہری معاہدے کے نفاذ کے ساتھ ایران فوبیا کا خاتمہ، ایران دوستی کا پھیلاو اور دنیا بھر میں ایرانی سرمایہ کاری کے متعدد مواقع فراہم کرنے کے لئے پہلا قدم اٹھایا ہے.

سنیئر جہانگیری نے کہا کہ تمام ممالک کے ساتھ دوطرفہ تعلقات قائم کرنے کا ہمارا تین مقاصد ہیں جو پہلا مقصد بے روزگاری مسئلے کے حل کے لئے ایرانی منڈیوں کو فروغ دینا ہے اور ہم یقین رکھتے ہیں کہ اس حوالے سے نجی شعبے دوسرے ممالک کو اپنی پیدا ہونے والی مصنوعات کی برآمد کرسکتا ہے.

نائب ایرانی صدر نے غیرملکی سرمایہ کاری کو دوسرا مقصد قرار دیتے ہو‏ئے کہا کہ غیر ملکی سرمایہ کاری ہماری پہلی ترجیح ہے جو خزانہ اور غیرملکی قرضوں کے حصول ان میں سے ایک ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ عالمی بڑی کمپنیاں اسلامی جمہوریہ ایران کی منڈیوں میں سرگرمی کے لئے بے تاب ہیں اور ایران، ٹوٹل کمپنی کے درمیان باہمی تعاون کے معاہدے پر دستخط کرنا ہمارے ملک کی سرمایہ کاری کے مواقع کی نشاندہی کرتا ہے.

جہانگیری نے کہا کہ ایران اور فرانس نے پہلے معاہدے پر دستخط کیا اور ہمیں اپنے ملک کی بہبود اور مفادات کے لئے اس معاہدے کی صلاحیتوں سے استعمال کرنا چاہیئے.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ ہم تمام طاقتور ممالک کے ساتھ نئی ٹیکنالوجی کی برآمدات اور درآمدات کا خواہاں ہیں.

انہوں نے ایئربس طیاروں کی خریداری کو اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایئربس اور دوسرے طیارہ پیدا کرنے والی کمیپنیاں اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ باہمی تعاون کے لئے تیار ہیں.

9393*274**