ایران کا دنیا میں داعش کی بڑھتی ہوئی دہشتگردی کی کاروائیوں پر انتباہ

تہران - ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے مصر کے علاقے صحرائے 'سینا' میں داعش کے سفاکانہ حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے دنیا کے مختلف علاقوں میں داعش کی بڑھتی ہوئی دہشتگردی کی کاروائیوں پر انتباہ کیا ہے.

تفصیلات کے مطابق، 'بہرام قاسمی' نے جمعہ کے روز اپنے ایک بیان میں سنیا کے علاقے میں دہشتگردی کے حملے کے نتیجے میں انسانی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا.

انہوں نے اس حملے میں جاں بحق اور زخمی ہونے والوں کے لواحقین کے ساتھ تعزیت اور اپنی ہمدردی کا اظہار بھی کیا.

قاسمی نے انتباہ کیا کہ عراق اور شام میں دہشتگردوں کی سنگین شکست کے بعد داعش کے مفرور کارندوں کی حالیہ خطے اور دنیا کے بعض علاقوں میں کاروائیاں تشویشناک ہیں.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ ناکام دہشتگردوں کی حالیہ کاروائیوں کے خلاف مضبوط اقدامات نہ اٹھائے گئے تو اس صورت میں دنیا دہشتگردی کی نئی شکل کی شکار ہوگی.

یاد رہے کہ مصر کے علاقے شمالی سینا میں رفح چیک پوسٹ پر دہشتگردوں کے حملے میں مصری فوج کے ایک افسر سمیت 10 اہلکار ہلاک اور 20 سے زائد زخمی ہوگئے ہیں.

حکام کے مطابق یہ حملہ البرث نامی علاقے کے جنوب میں واقع ایک گاؤں رفحہ میں فوج کے ایک مرکز کے نزدیک واقع چوکی پر ہوا.

٢٧٤**