جوہری معاہدہ: امریکی خلاف ورزیوں پر خاموش نہیں بیٹھیں گے: ایران

تہران - ارنا - سنئیر ایرانی سفارتکار نے جوہری معاہدے کے نفاذ کے حوالے سے امریکی خلاف ورزیوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، امریکہ کے اس منفی رویے پر خاموش نہیں رہے گا.

یہ بات نائب ایرانی وزیرخارجہ برائے یورپی اور امریکی امور 'مجید تخت روانچی' نے گزشتہ روز تہران میں فرانسیسی دفترخارجہ کے ڈائریکٹرجنرل برائے یورپی اور امریکی امور 'کرسٹین ماسے' کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر فریقین نے خطی کی تازہ ترین صورتحال پر تبادلہ خیال کیا اور انسداد دہشتگردی اور انتہاپسندی کی روک تھام کے لئے دوطرفہ تعاون کا بھی جائزہ لیا.

نائب ایرانی وزیر خارجہ نے اس ملاقات کے دوران پیرس میں مجاہدین خلق تنظیم کے ایران دشمن عناصر اور منافقین کی جانب سے نشست کے انعقاد پر احتجاج کیا.

انہوں نے جوہری معاہدے کے حوالے سے مزید کہا کہ اس معاہدے کے مکمل نفاذ تمام فریقین کی ذمہ داری ہے تاہم ایران اپنے وعدوں پر من و عن عمل کررہا ہے.

اس موقع پر سنئیر فرانسیسی سفارتکار نے کہا کہ ان کا ملک ایران جوہری معاہدے کے نفاذ کے لئے پُرعزم ہے.

انہوںنے کہا کہ فرانس، اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ تمام شعبوں میں دوطرفہ تعاون بالخصوص علاقائی اور چندفریقی تعاون کو توسیع دینے کا خواہاں ہے.

٢٧٤**