ایران میں عالمی انسداد ماحولیاتی آلودگی کانفرس کا آغاز

تہران - ارنا - ایرانی دارالحکومت 'تہران' میں بین الاقوامی انسداد ماحولیاتی آلودگی کی کانفرنس کا آج بروز پیر آغاز ہوگیا جس میں 43 ممالک کے وزرا اور اعلی نمائندے شریک ہیں.

تفصیلات کے مطابق، کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں صدر اسلامی جمہوریہ ایران ڈاکٹر حسن روحانی، وزیرخارجہ محمد جواد ظریف، نائب ایرانی صدر برائے امور سائنس اور ٹیکنالوجی سورنا ستاری، ماحولیاتی تحفظ ادارے کی سربراہ معصومہ ابتکار، وزیر توانائی اور بعض اراکین پارلیمنٹ شریک ہیں.

اس کانفرنس کا انعقاد اقوام متحدہ اور ایران کے ماحولیاتی تحفظ ادارے کے مشترکہ تعاون سے ہورہا ہے.

یاد رہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران ماحولیاتی آلودگی کا مقابلہ اور گرد کے طوفانوں کے مسئلے پر توجہ دینے کے حوالے سے اہم اقدامات کر رہا ہے.

مٹی اور گرد کے طوفانوں سے دنیا کے مختلف علاقے متاثر ہورہے ہیں اس لئے ایران میں ہونے والی آئندہ کانفرنس میں دنیا کے مختلف ممالک کے نمائندے شریک ہیں.

گزشتہ سال اقوام متحدہ میں ماحولیاتی آلودگی کا مقابلہ کرنے کے لئے چار قراردادیں پاس کی گئیں جن میں ایران نے بھی اہم کردار ادا کیا.

مختلف ممالک بشمول اٹلی، فرانس، جرمنی، چین، جمہوریہ آذربائیجان، بیلجئیم، قطر، سلطنت عمان، کویت، پاکستان، ارمینیا، عراق، چاڈ، ترکی، بھارت، اردن، جنوبی کوریا، اسلووکیا، سربیا اور امریکہ کے مندوبین اس کانفرنس میں موجود ہیں.

تین روزہ بین الاقوامی کانفرنس میں انسداد ماحولیاتی آلودگی کےلئے علاقائی اور بین الاقوامی تعاون کا جائزہ لیا جائے گا.

کانفرنس کے افتتاحی اجلاس کے بعد ماہرین اور وزرا کی سطح پہ نشستوں کا انعقاد کیا جائے گا اور اس کے علاوہ چار تکنیکی نشستیں بھی ہوں گی.

٢٧٤**