موصل کی آزادی خطے میں پائیدار امن اور سلامتی کے استحکام کیلئے ایک اہم قدم ہے: ایرانی اسپیکر

تہران - ارنا - ایرانی مجلس (پارلیمنٹ) کے اسپیکر نے اپنے عراقی ہم منصب کو تکفیری دہشتگردوں کے قبضے سے عراقی شہر موصل کی آزادی پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ موصل کی آزادی خطے میں پائیدار امن اور سلامتی کے استحکام کیلئے ایک اہم قدم ہے.

ان خيالات كا اظہار 'علي لاريجاني' نے اتوار كے روز عراقي اسپيكر 'سليم الجبوري' كے نام ايك پيغام ميں موصل كي آزادي پر مباركباد پيش كرتے ہوئے كيا.

اس موقع پر انہوں نے كہا كہ ہم خوشي سے عراقي حكومت، قوم اور پارليمنٹ كے اراكين كو تكفيري دہشتگردوں كے قبضے سے موصل كي آزادي پر مباركباد پيش كرتے ہيں.

لاريجاني نے اس بات پر زور ديا كہ يہ كاميابي خطے بالخصوص عراق كي پائيدار امن اور سلامتي كے استحكام كيلئے ايك اہم قدم ہے جو عراقي ديني رہنماوں بالخصوص آيت اللہ سيستاني كے حكم كي تعميل اور باہمي اتحاد كے ساتھ ايسي كاميابي حاصل ہوسكا.

ايراني اسپيكر نے كہا كہ اسلامي جمہوريہ ايران عراق كے ساتھ گزشتہ كي طرح دہشتگردوں كے خلاف جنگ اور اس ملك كي ترقي ميں شانہ بہ شانہ كھڑا ہے.

انہوں نے عراقي قوم اور حكومت كي مزيد سربلندي كے لئے دعا كي.

واضح رہے كہ آيت اللہ سيستاني نے قريب تين سال پہلے فتوي جاري كيا تھا كہ عراق ميں اپنے وطن كے دفاع ميں جاں بحق ہونے والے شہدا درجہ اول كے شہيد ہيں اور ان كو غسل اور كفن دينے كي ضرورت نہيں ہے بلكہ صرف نماز پڑھ كے دفنايا جاسكتا ہے.

انہوں نے تمام عراقي عوام سے مطالبہ كيا تھا كہ تكفيريوں بالخصوص داعش كے دہشتگردوں كا مقابلہ كرنے كے لئے اٹھ كھڑے ہوں.

واضح رہے كہ عراقي سيكورٹي فورسز نے جمعرات كے روز 'موصل' كے قديمي علاقوں بالخصوص تاريخي مساجد النوري اور الحدبا پر جہاں داعش كے سرغنہ ابوبكر البغدادي نے اپني نام نہاد خلافت كا اعلان كيا تھا، مكمل كنٹرول حاصل كرليا.

عراق كے قومي ٹيلي ويژن كے مطابق، سيكورٹي فورسز نے داعش كے اصل گڑھ پر كنٹرول حاصل كرليا جہاں داعش دہشتگردوں كے سرغنہ ابوبكر البغدادي نے جون 2014 ميں يہاں سے عراق پر اپني نام نہاد خلافت كا اعلان كيا تھا.

واضح رہے كہ عراق ميں داعش دہشتگردوں كي سرگرميوں كے آغاز سے يہ عناصر تاريخي مسجد النوري اور اس سے ملحقہ علاقوں كو اپنے قبضے ميں ركھنے كے لئے بڑي مزاحمت ديكھائي.

گزشتہ دنوں داعش كے دہشتگردوں نے موصل كي تاريخي ’النوري مسجد‘ اور اس كے جھكے ہوئے مينار كو شہيد كيا جہاں داعش كے سربراہ ابوبكر البغدادي پہلي اور آخري بار منظر عام پر آيا تھا.

*9393*271**