ایران جوہری معاہدے پر نظرثانی کرنے کا امریکی مطالبہ بے بنیاد ہے:بروجردی

مشہد - ارنا - ایران کی پارلیمنٹ کا قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی کمیشن کے چیئرمین نے امریکہ کے منفی اقدامات پر تنقید کرتے ہوئے جوہری معاہدے پر نظرثانی کرنے کا امریکی مطالبہ بے بنیاد ہے.

يہ بات علاء الدين بروجردي نے صحافيوں سے بات چيت كرتے ہوئے كہي.

انہوں نے ايران اورامريكہ سميت يورپي ممالك كے درميان جوہري معاہدے كے نفاذ كا حوالہ ديتے ہوئے كہا كہ اس معاہدے ميں كسي بھي تبديلي كي كوشش كي ہم بھرپور مزاحمت كريں گے.

انہوں نے كہا كہ جوہري معاہدہ ايك بين الاقوامي معاہدہ ہے جس ميں روس چين سميت يورپي ممالك اور امريكہ كے سربراہاں نے بھي اس پر دستخط كئے ہيں.

انہوں نے كہا كہ ہم امريكہ كے اس معاہدے پر نظر ثاني كے مطالبے كو مسترد كرتے ہيں.

انہوں نے ايران كے خلاف امريكہ كي نئي پابنديوں پر تنقيد كرتے ہوئے كہا ہے كہ يورپي ممالك كے سربراہاں كو چاہيئے امريكہ كي ايسي بيہودہ پاليسيوں كي روك تھام كے لئے عملي اقدامات كريں.

انہوں نے كہا كہ اسلامي جمہوريہ ايران اپنے عوام كے حقوق كے لئے امريكہ كے ان منفي سرگرميوں كے خلاف ڈٹ كر مقابلہ كرے گا.

*1*271**