موصل میں داعش پر غلبہ، دہشتگردوں کی بقا کا آخری مرحلہ تھا: نائب ایرانی صدر

تہران - ارنا - سنئیر نائب ایرانی صدر نے کہا ہے 'موصل' میں داعش دہشتگردوں کے خلاف عراقی قوم اور مسلح افواج کی حالیہ فتح دہشتگرد گروپوں کی بقا کا آخری مرحلہ تھا.

تفصیلات کے مطابق، 'اسحاق جہانگیری' نے آج بروز ہفتہ اپنے ٹویٹر پیغام میں مزید کہا کہ موصل آزادی کے بعد دہشتگردوں کی بقا کے خاتمے سے خطے میں امن و سلامتی کے پائیدار قیام کا خواب شرمندہ تعبیر ہوگا.

واضح رہے کہ عراقی سیکورٹی فورسز نے جمعرات کے روز 'موصل' کے قدیمی علاقوں بالخصوص تاریخی مساجد النوری اور الحدبا پر جہاں داعش کے سرغنہ ابوبکر البغدادی نے اپنی نام نہاد خلافت کا اعلان کیا تھا، مکمل کنٹرول حاصل کرلیا.

عراق کے قومی ٹیلی ویژن کے مطابق، سیکورٹی فورسز نے داعش کے اصل گڑھ پر کنٹرول حاصل کرلیا جہاں داعش دہشتگردوں کے سرغنہ ابوبکر البغدادی نے جون 2014 میں یہاں سے عراق پر اپنی نام نہاد خلافت کا اعلان کیا تھا.

واضح رہے کہ عراق میں داعش دہشتگردوں کی سرگرمیوں کے آغاز سے یہ عناصر تاریخی مسجد النوری اور اس سے ملحقہ علاقوں کو اپنے قبضے میں رکھنے کے لئے بڑی مزاحمت دیکھائی.

گزشتہ دنوں داعش کے دہشتگردوں نے موصل کی تاریخی 'النوری مسجد' اور اس کے جھکے ہوئے مینار کو شہید کیا جہاں داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی پہلی اور آخری بار منظر عام پر آیا تھا.

٢٧٤**