ایران، فرانس اور یورپ کے ساتھ اقتصادی تعاون بڑھانے کے لئے پُرعزم

تہران - ارنا - ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ایران اور فرانس کے درمیان تجارتی حجم میں تین گنا اضافہ ہوا ہے اور ہم فرانس سمیت یورپ ممالک کے ساتھ پائیدار اقتصادی تعاون کو فروغ دینے کے لئے پُرعزم ہیں.

يہ بات ' محمدجواد ظريف ' نے منگل كے روز تہران ميں فرانسيسي وزير خارجہ 'يان مارك آئرولٹ' كے ساتھ ايك ملاقات كے دوران گفتگو كرتے ہوئے كہي.



اس موقع پر انہوں نے كہا كہ ايران اور فرانس كے درميان باہمي تعلقات كي توسيع اور سياسي، اقتصادي، ثقافتي، سائنس اور ٹيكنالوجي كے شعبوں سميت علاقائي تعاون بالخصوص دہشتگردوں كے خلاف مشتركہ تعاون كو مزيد توسيع دے سكتے ہيں.



ظريف نے گذشتہ سال ايراني صدر حسن روحاني كے فرانس كے دورے كا حوالہ ديتے ہوئے كہا كہ اس دورے كے موقع پر دونوں ممالك كے صدور نے ايران،فرانس مشتركہ اقتصادي كميشن كے اجلاس كے انعقاد پر اتفاق كيا تھا.



انہوں نے مزيد كہا كہ مشتركہ كميشن كے اجلاس سے اقتصادي تعاون بڑھانے كو مزيد فروغ دينے كے حوالے سے دونوں ممالك كے سياسي عزم كي نشاندہي ہے.



انہوں نے كہا كہ ايران اور فرانس كے درميان اچھے اقتصادي تعلقات قائم ہيں اور 2016 كے گياڑھويں مہينوں كے دوران جوہري معاہدے كے بعد دونوں ممالك كے اقتصادي تعلقات كي شرح ايك ارب 70 كروڑ يورو تك پہنچ گئي جو گذشتہ سال كے مقابلے ميں تين گنا اضافہ ہے.



ايراني وزير خارجہ نے كہا كہ آج پوري دنيا بالخصوص امريكہ اور يورپ متعدد مسائل كے شكار ہيں مگر اسلامي جمہوريہ ايران ايك قابل اعتماد اور مستحكم پارٹنر ہے اور يورپي ممالك خاص طور پر فرانس كے ساتھ طويل المدت اقتصادي تعلقات كو فروغ دينے كے لئے تيار ہے.



انہوں نے اس بات پر زور ديا كہ اسلامي جمہوريہ ايران زيادہ قدرتي ذخائر، جغرافيائي پوزيشن، ٹرانسپورٹ كي سہوليات، تعليم يافتہ نوجوانوں، ماركيٹ ميں اقتصادي بحران كے انتظام كي صلاحيت كي وجہ سے ايك قابل اعتماد اور مستحكم پارٹنر كي حيثيت سے اہم ملك ہے.



ظريف نے دونوں ممالك كے درميان تيل اور گيس، پيٹرو كيميكل، نقل و حمل اور راہداري، سائنس اور ٹيكنالوجي، علم كي بنياد پر كي صنعت، كان كني كي صنعت، پاني وسائل كي ترقي، ماحول اور دوسرے موضوعات كے حوالے سے باہمي تعاون كي ترقي دينے كي ضرورت پر زور ديا.



٩٣٩٣**٢٧٤