امریکی اقدامات کا موثر انداز میں جواب دیا جائے گا: ایران

تہران - ارنا - ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، امریکہ کی جانب سے ایران سمیت بعض اسلامی ممالک کے خلاف اٹھائے جانے والے اقدامات کا موثر اور مناسب انداز میں جواب دے گا.

'بہرام قاسمي' نے پير كي رات اپنے ايك بيان ميں كہا كہ ايراني دفترخارجہ ميں مختلف محكموں كے حكام پر مشتمل ايك خصوصي كميٹي تشكيل دي گئي ہے جس كا مقصد اوورسيز ايرانيوں كے مسائل بالخصوص امريكہ ميں بسنے والے ايراني شہريوں كي ممكنہ مشكلات كا ازالہ كرنا ہے.



انہوں نے مزيد كہا كہ اتوار اور پير كے روز دنيا كے تمام ممالك ميں واقع ايراني سفارتخانوں كو غيرمعمولي احكامات دئے گئے جس ميں بيرون ملك بسنے والے ہمارے شہريوں كے مسائل كو ترجيحي بنياد پر حل كرنا ہے.



ترجمان نے كويتي وزيرخارجہ كے حاليہ ايران كے دورے كے حوالے سے ميڈيا ميں جو يہ كہا جارہا ہے كہ كويتي امير نے ايران اور سعودي عرب كے درميان ثالثي كي پيشكش كي ہے، كہا كہ اس پيشكش كي تصديق نہيں كي جاسكتي كيونكہ خطے كے دوسرے ممالك كے ساتھ ثالثي كي ضرورت نہيں اور ہم اپنے معاملات كو دوطرفہ سطح پر حل كرسكتے ہيں.



انہوں نے بتايا كہ كويت ہمارا پڑوسي ملك ہے اور ايران نے كويت كے ساتھ تعلقات كي توسيع كے لئے موثر حكمت عملي اپنائي ہے.



انہوں نے اس بات پر زور ديا كہ اسلامي جمہوريہ ايران تمام ہمسايہ ممالك كے ساتھ برابري كي سطح پر باہمي تعلقات كو وسعت دينے كا خواہاں ہے.



بہرام قاسمي نے مزيد بتايا كہ انہوں نے بتايا كہ سعودي عرب اپني ماضي كي غلطيوں كو سدھارنے اور ايران كے ساتھ تعاون كے لئے تيار ہو تو اسلامي جمہوريہ ايران بھي اس كا خيرمقدم كرتا ہے.



٢٧٤**