فرانسسی وزیر خارجہ کا جلد دورہ ایران متوقع/ جوہری معاہدے اور اقتصادی تعاون پر تبادلہ خیال کیا جائے گا

تہران - ارنا - ایران میں فرانسیسی سفارتخانے کے مطابق، فرانس کے وزیر خارجہ جلد اسلامی جمہوریہ ایران کا سرکاری دورہ کریں گے اور اس دورے کا مقصد جوہری معاہدے کے نفاذ کے بعد ایران اور فرانس کے درمیان اقتصادی، تجارتی اور صنعتی شعبوں میں تعلقات کو فروغ دینے کے مواقعوں کا جائزہ لینا ہے.

فرانسيسي وزير خارجہ كا دورہ ايران اس وقت ہورہاہے جب حال ہي ميں فرانس كے صدر فرانسوا اولاند نے ايك بار پھر جوہري معاہدے كي حمايت كرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ كو اس پر پابند نہ رہنے كے حوالے سے خبردار كيا ہے.



فرانسيسي سفارت خانے كے مطابق، جان مارك ارو 30 اور 31 جنوري كو ايك اعلي سياسي ، تجارتي اور اقتصادي وفد كے ہمراہ ايران كا سركاري دورہ كريں گے.



اس دورے كے موقع پر وہ ايران، فرانس مشتركہ اقتصادي كميشن كے اجلاس ميں فرانس كے وفد كي قيادت كريں گے.



فرانسيسي وزير خارجہ اپنے ايراني ہم منصب سے ملاقات كے بعد ايراني صدر حسن روحاني سے بھي ملاقات كريں گے.



فرانس كے وزيرخارجہ ايراني قيادت سے شام ، يمن اور عراق كي تازہ ترين صورت حال اور دہشت گردي كے خلاف جنگ ميں ايران كے كردار كے حوالے سے بھي بات چيت كريں گے.



اس دورے ميں فرانس كے وزير خارجہ كے ساتھ فرانسيسي 60 مختلف كمپنيوں كے سربراہان اور نمائندے بھي ايران كا دورہ كريں گے جس ميں ايران كي مختلف كمپنيوں كے ساتھ اقتصادي، تجارتي اور صنعتي شعبوں ميں تعاون بڑھانے كے حوالے سے معاہدوں پر دستخط كئے جائيں گے.



271**