آستانہ میں ہونے والے شامی مذاکرات میں امریکی شرکت کے مخالف ہیں: ایران

ڈیووس - ارنا - ایرانی وزیر خارجہ نے ڈیووس میں منعقدہ عالمی اقتصادی فورم کے موقع پر کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، قازقستان کے دارالحکومت آستانہ میں آئندہ ہونے والے شام امن مذاکرات میں امریکی شرکت کی مخالفت کرتا ہے.

يہ بات 'محمدجواد ظريف' نے ڈيووس سالانہ اجلاس كے موقع پر شام كي صورتحال كے حوالے سے منعقدہ ہونے والي مشاورتي نشست ميں گفتگو كرتے ہوئے كہي.



انہوں نے كہا كہ ايران كا مؤقف واضح ہے، آستانہ ميں آئندہ شام امن مذاكرات ميں امريكي شركت كے خواہاں نہيں ہيں تاہم اس مذاكرات ميں دعوت كرنے والے ملك ہم نہيں قازقستان ہے ہم نے صرف دنيا كو اپنے مؤقف سے آگاہ كيا ہے.



انہوں نے بتايا كہ امريكي سربراہي ميں گزشتہ امن مذاكرات ميں كوئي نتيجہ حاصل نہيں ہے، جبكہ ايران،روس اور تركي كے سہ فريقي تعاون ميں اچھي پيشرفت حاصل ہوئي جس كي پہلي كاميابي شام ميں جنگ بندي كے نفاذ تھي اور انشاللہ شامي حكومت اور باغي گروہوں كے درميان امن عمل كو آگے بڑھانے ميں بھي كامياب كاركردگي ديكھائيں گے.



۲۷۴**