شامی بحران کے حل کیلئے ہر تعمیری عمل کی حمایت کریں گے: ایڈمیرل شمخانی

تہران - ارنا - اعلی ایرانی قومی سلامتی کونسل کے سربراہ نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران شامی بحران کو سیاسی ذریعے سے حل کرنے کے لئے ہر تعمیری پالیسی اور عمل کی بھرپور حمایت کرتا ہے.

يہ بات ايڈميرل 'علي شمخاني' نے منگل كے روز ايران كے دورے پر آئے ہوئے شامي وزير اعظم 'عماد خميس' كے ساتھ ايك ملاقات كے دوران گفتگو كرتے ہوئے كہي.



اس موقع پر انہوں نے كہا كہ اسلامي جمہوريہ ايران شامي شہر حلب كي طرح دہشت گردوں كے قبضے سے شام كے دوسرے علاقوں كي آزادي تك اپني حمايت كا سلسلہ جاري ركھے گا.



شام ميں جاري جنگ بندي كي خلاف ورزي پر علي شمخاني نے مزيد كہا كہ دہشت گرد گروہوں كو سياسي مذاكرات اور شام ميں جنگ بندي سے اپني سازشوں كي اجازت نہيں ديني چاہيئے.



انہوں نے كہا كہ اسلامي جمہوريہ ايران، روس اور شام مسلسل باہمي تعاون كے ساتھ دہشت گردي سے مقابلے كرسكتے ہيں.



اس موقع پر انہوں نے اس بات پر زور ديا كہ ايران ہميشہ خطے ميں انتہا پسندي كے خلاف ڈٹ كر كھڑا ہوا ہے اور ہم علاقائي ممالك كي سالميت اور خودمختاري كي بھرپور حمايت كرتے ہيں.



انہوں نے كہا كہ مغربي ممالك اور امريكہ كو شامي حكام اور مزاحمتي فرنٹ پر پابندياں عائد كرنے كي بجائے دہشت گرد اور انتہاپسند گروپوں سے نمٹنا چاہيئے.



انہوں نے بتايا كہ اسلامي جمہوريہ ايران اور شام كے درميان اقتصادي، سياسي اور تعميراتي شعبوں ميں دوطرفہ تعلقات بڑھانا ناگزير ہيں.



عماد خميس نے شام كي حاليہ كاميابيوں ميں اسلامي جمہوريہ ايران كے اہم كردار كو سراہتے ہوئے كہا كہ شام ميں دہشتگردي بالخصوص داعش اور النصرہ فرنٹ جيسي دہشتگرد تنظيموں كے خلاف مشتركہ كاروائياں جاري ركھني چاہيں.



271**