سعودی وزیر حج کی دعوت نامے کا جواب دینے پر تیار ہیں: ایران

تہران - ارنا - ایرانی سپریم لیڈر کے اعلی نمائندے برائے امور حج و زیارات نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، سعودی عرب کے وزیر حج کی دعوت نامہ کا جواب دینے کے لئے تیار ہے.

يہ بات علامہ سيد 'علي قاضي عسگر' نے گزشتہ ادارہ حج و زيارات كي پلاننگ كونسل كي نشست سے خطاب كرتے ہوئے كہي.



اس موقع پر انہوں نے بتايا فيصلہ كيا گيا ہے كہ آئندہ حج كے حوالے سے ايراني اور سعودي حكام كے درميان مذاكرات كے حوالے سے مقدمات فراہم كئے جائيں.



اعلي ايراني نمائندے نے تصديق كي ہے كہ آئندہ حج كے حوالے سے باضابطہ مذاكرات كرنے كے لئے سعودي عرب كي جانب سے ہميں دعوت نامہ وصول ہوگيا ہے.



علامہ قاضي عسكر نے كہا كہ حاليہ دعوت نامہ كي متن اور مندرجات گزشتہ دعوت ناموں سے زيادہ فرق اور اسلامي جمہوريہ ايران جلد سعودي عرب كے خط كا جواب دے گا.



انہوں نے بتايا كہ حج كے تمام امور سميت حاجيوں كي رہائش گاہ، خوراك، طبي، نقل و حمل، سيكورٹي، بينكنگ اور قونصلر رسائي كے مسائل كا جائزہ ليا جارہا ہے جس كے لئے ماہرين ہر مشتمل خصوصي كميٹياں تشكيل دي جائيں گي.



انہوں نے بتايا كے ايراني وفد مذاكرات كے لئے سعودي عرب كا دورہ كرے گا اور اس موقع پر فريقين گزشتہ سالوں مسجد الحرام اور مني كے سانحوں ميں شہيد ہونے والے ايراني حاجيوں كے حقوق پر مذاكرات كريں گے.



٩٣٩٣*٢٧٤**