ایران میں براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری میں اضافہ: عالمی بینک

تہران - ارنا - ورلڈ بینک نے اپنی ایک تازہ ترین رپورٹ میں کہا ہے کہ ایران اور مغربی طاقتوں کے درمیاں طی پانے والے جوہری معاہدے کے نتیجے اور عالمی پابندیوں کے خاتمے کے بعد اسلامی جمہوریہ ایران میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے.

ورلڈ بينك نے 2017 كے بين الاقوامي قرضوں كے اعداد و شمار رپورٹ ميں اعلان كياہے كہ 2015 ميں ايران ميں براہ راست 2 ارب سے زائد بيروني سرمايہ كاري ہوئي ہے.



اس رپورٹ كے مطابق اميد كي جارہي ہے كہ اس سال بيروني سرمايہ كار ايران ميں براہ راست زيادہ سرمايہ كاري كريں گے.



ورلڈ بينك نے اپنے رپورٹ ميں اعلان كياہے كہ مشرقي وسطي اور شمالي افريقا ميں 2012 ميں 20 ارب 700 ملين ڈالر كي براہ راست سرمايہ كاري ہوئي جو 2015 ميں كم ہوكر 14 ارب 400 ملين ڈالر تك پہنچ گئي تھي.



گذشتہ ايك سال كے دوران اسلامي جمہوريہ ايران نے بيروني سرمايہ كاروں كو ملك ميں سرمايہ كاري كے لئے مختلف سہولتيں اور پيكجز دينے كا اعلان كياہے.



274**