وسطی ایشیا اور خلیجی ممالک کی ایران سے تیل مشنری خریدنے میں دلچسپی

تہران - ارنا - نائب ایرانی وزیر تیل نے کہا ہے کہ ایران اس وقت تیل صنعت سے متعلق بعض مشنری دوسرے ممالک کو برامد کر رہا ہے اور اس کے ساتھ وسطی ایشیا اور خلیج فارس کے ممالک بھی ایران سے اس مشنری کو خریدنے میں دلچسپی رکھتے ہیں.

يہ بات نائب وزير تيل برائے انجينئرنگ، تحقيق اور ٹيكنالوجي امور 'محمدرضامقدم' نے جمعے كے روز ارنا كے نمائندے كے ساتھ گفتگو كرتے ہوئے كہي.



اس موقع پر انہوں نے كہا كہ اس وقت ايراني مينوفيكچررز 60 سے 65 فيصد تيل صنعت كے ضروري ساز و سامان بنانے كي قابليت ركھتي ہے.



انہوں نے مزيد كہا كہ اندروني وسائل سے بنانے والے تيل ساز و سامان ہمسايہ ممالك كو برامد كيا جاتا ہے.



رضا مقدم نے كہا كہ وزارت تيل اب تك ايراني مينوفيكچررز كے ساتھ 52 تعاون كے معاہدوں پر دستخط كئے ہيں.



انہوں نے كہا كہ اس معاہدوں ميں معروف غير ملكي كمپنيوں كے ساتھ تعاون كي جاتي ہے كہ ان معاہدوں ميں سے ڈاون ہول پمپس كي تعمير ہے.





9393*274**