غیروابستہ تحریک کے 17ویں اجلاس میں شریک سربراہان مملکت اعلامیہ کے ڈرافٹ کا جائزہ لیں گے

مارگریٹا جزیرہ، وینزویلا - ارنا - غیروابستہ تحریک (NAM) کے 17ویں سربراہی اجلاس میں شریک رکن ممالک کے سربراہان مملکت ہفتے کے روز اجلاس کے اختتامی اعلامیہ کے ڈرافٹ کا جائزہ لیں گے.

اس ڈرافٹ ميں ايران مخالف بيانات حذف اور خودمختار ممالك كي سالميت كي خلاف ورزي كرنے پر امريكي اقدامات پر تنقيد كے نكات كو بھي شامل كرديا گيا ہے.



وينزويلا كے مارگريٹا جزيرے ميں غيروابستہ تحريك كے ماہرين اور وزرائے خارجہ كے اجلاس انعقاد ہوچكا ہے اور آج اور كل تك ركن ممالك كي اعلي قيادت 17ويں اجلاس كے اختتامي اعلاميہ كے ڈرافٹ پر تبادلہ خيال كرے گي.



اختتامي اعلاميہ كے ڈرافٹ كي تياري ميں ايران كے ساتھ مشاورت بھي كي گئي جس كے نتيجے ميں اس ڈرافٹ ميں ايران مخالف بيانات كو حذف كرتے ہوئے آزاد ممالك كي سالميت كي خلاف ورزي كرنے كے امريكي اقدامات پر تنقيد كو بھي شامل كيا گيا ہے.



اس اجلاس ميں آج اسلامي جمہوريہ ايران كے صدر مملكت 'حسن روحاني' غيروابستہ تحريك كے صدر كي حيثيت سے ايران كي چار سالہ كاركردگي پر رپورٹ پيش كريں گے جس كے بعد باضابطہ طور پر اس تحريك كي صدارت وينزويلا كي سپرد كيا جائے گا.



غيروابستہ تحريك كے 17ويں سربراہي اجلاس كے اختتامي اعلاميہ تين فصلوں اور 907 نكات پر مشتمل ہے.



تيار كئے جانے والے ڈرافٹ ميں اقوام متحدہ كے 68ويں اجلاس كے موقع پر پاس ہونے والي ايراني صدر حسن روحاني كے تشدد اور انتہا پسندي سے پاك دنيا كے نظريہ كي قرارداد سے بھي استفادہ كيا گيا ہے.





۲۷۴**