جوہری مذاکراتی ٹیم کو سپریم لیڈر کی حمایت حاصل تھی: آیت اللہ رفسنجانی

تہران - ارنا - ایران کی تشخیص مصلحت نظام کونسل کے چیئرمین نے ایران جوہری معاہدے کی اہمیت کا ذکر کرتے ہوئے کہ ہے کہ سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای جوہری مذاکرات کے حامی اور مذاکرات کاروں کی حمایت کرتے رہے ہیں.

آيت اللہ اكبر ہاشمي رفسنجاني نے كہا كہ جوہري مذاكرات قائد اسلامي انقلاب حضرت آيت اللہ خامنہ اي كي ہدايت كے مطابق ہوتے رہے اور سپريم ليڈر جوہري مذاكرات ميں آخر تك مذاكراتي ٹيم كي حمايت كرتے رہے ہيں.



انہوں نے كہا كہ يہ بات ہمارے لئے واضح تھي كہ مغرب كي پاليسي فوڈ فار آئل ہے ان كو ہمارے تيل كي ضرورت تھي اور ہميں بدلے ميں خوراك كي ضرورت تھي.



آيت اللہ رفسنجاني نے اسلامي جمہوريہ ايران كے مغرب كے ساتھ جوہري مذاكرات كے كامياب ہونے ميں سپريم ليڈر كے كرادار كو سراہا.



انہوں نے كہا كہ جوہري مذاكرات كے تحت ايران اپنے وعدوں پر پورا اتر رہا ہے ليكن مغرب بالخصوص امريكہ اپنے وعدوں كي پاسداري نہيں كر رہا.



اگست كے مہينے ميں ايراني وزير خارجہ محمد جواد ظريف نے كہا كہ امريكہ اگر جوہري مذاكرات كے دوران كئے جانے والے وعدوں كو پورا نہيں كرے گا تو جوہري معاہدے كے حوالے سے سخت نقصان كا سامنا كرنا ہو گا.



271**